عبوری/جہاز کے عملے کا ویزا

اس صفحہ پر:


عمومی سوالات

عمومی جائزہ

عبوری (C ویزا)

کسی غیر ملکی شہری کو امریکہ سے ہوکر کسی غیر ملکی سرزمین پر پر فوری طور پر اور مسلسل ٹرانزٹ کے لئے ایک موزوں عبوری ویزا درکار ہوتا ہے۔ اس ضرورت کی استثنائیات میں وہ مسافر شامل ہیں جو ویزا ویور پروگرام کے تحت بغیر کسی ویزا کے امریکہ سے ٹرانزٹ کرنے کے اہل ہیں یا وہ مسافر جو کسی ایسے ملک کے شہری ہیں جن کا امریکہ کے ساتھ ان کے شہریوں کو بغیر ویزا کے امریکہ کا سفر کرنے کی اجازت دینے کا معاہدہ ہے۔

اگر مسافر امریکہ ہوکر ٹرانزٹ کے علاوہ کسی اور مقاصد کے لئے دوران قیام مراعات کا خواہش مند ہے، جیسے دوستوں سے ملاقات یا سیر و سیاحت، تو درخواست گزار کو اس ویزا کے لئے اہل ہونا اور اسے حاصل کرنا پڑے گا جو اس مقصد کے لئے درکار ہوتا ہے، جیسے B-2 ویزا۔

عملہ (D ویزا)

امریکہ میں کسی سمندری جہاز یا ہوائی جہاز پر خدمت پر مامور عملہ کے رکن کو عملے کا ویزا درکار ہوتا ہے۔امریکہ یا اس کے پانی سے گزرنے والے کسی ہوائی جہاز یا سمندری جہاز کے عملے کے ارکان کو عام طور پر ایک الحاقی ٹرانزٹ/عملے کا ویزا (C-1/D) استعمال کرنا پڑتا ہے۔ تاہم، چند معاملات میں، افراد کو صرف D ویزا کی ضرورت پڑ سکتی ہے۔

آؤٹر کانٹی نینٹل شیلف کے اندر موجود جہازوں پر کام کرنے والے عملے کے ارکان عملے کے ویزے کی جگہ ایک ترمیم شدہ B-1 ویزے کے لئے اہل ہو سکتے ہیں۔

پروازوں یا کروزوں کے درمیان کے خالی وقت کے دوران امریکہ میں داخل ہونے والے عملے کے ارکان کو بھی ایک B-1/B-2 درکار ہوگا جسے وہ ان ذاتی/تعطیلات کے دنوں کے دوران استعمال کر سکیں۔ C-1/D اور B-1/B-2 ویزا کے لئے ایک ساتھ درخواست دینے والے درخواست گزار صرف ایک ویزا درخواست کے لئے فیس ادا کرتے ہیں۔

اہلیت

ایک عبوری ویزا کی درخواست کے لئے، آپ کو مندرجہ ذیل چیزیں دکھانی ہونگی:
  • امریکہ سے فوری اور مسلسل ٹرانزٹ میں گزرنے کا ارادہ۔
  • ایک مشترکہ کیریئر ٹکٹ یا اپنی منزل کے ٹرانسپورٹیشن سے متعلق انتظامات کے دیگر شواہد۔
  • اپنے عبوری سفر کو مکمل کرنے کے لئے خاطر خواہ رقم۔
  • امریکہ سے نکلنے کے بعد دوسرے ملک میں داخل ہونے کا اجازت نامہ۔

C، D یا C-1/D ویزوں کی درخواست کے لئے، آپ کو قونصلر افسر کو مندرجہ ذیل چیزیں دکھانی ہونگی:

  • آپ کے سفر کا مقصد صرف یہ ہے کہ امریکہ میں صرف ٹرانزٹ یا عملے کے مقاصد کے لئے داخل ہوں۔
  • امریکہ میں قیام کے دوران آپ کو کوئی یو ایس وسیلہ کوئی ادائیگی کرے ایسا آپ کا کوئی ارادہ نہیں ہے، تاوقتیکہ آپ کو کام کرنے کے ایک عارضی ویزا کے لئے موزوں و مناسب منظوری نہ دی گئی ہو• امریکہ میں قیام کے کوئی یو ایس وسیلہ آپ کو کوئی رقم ادا کرے ایسا آپ کا کوئی ارادہ نہیں ہے، تاوقتیکہ آپ کو کام کرنے کے ایک عارضی ویزا کے لئے موزوں و مناسب منظوری نہ دی گئی ہو۔
  • آپ ایک مخصوص، محدود وقت کے لئے قیام کا منصوبہ رکھتے ہیں۔
  • آپ کے پاس امریکہ میں قیام کے دوران اپنے تمام اخراجات برداشت کرنے کے لئے رقم موجود ہونے کا ثبوت ہو۔

درخواست کے مشمولات

عبوری یا عملہ کے رکن کے ویزا کی درخواست کے لئے، آپ کو مندرجہ ذیل چیزیں جمع کرنی ہونگی:

  • ایک نان امیگرنٹ ویزا الیکٹرانک درخواست (DS-160) فارم۔ DS-160 کے بارے میں مزید معلومات کے لئے DS-160 ویب صفحہ پر جائیں۔
  • ایک پاسپورٹ جو امریکہ میں سفر کرنے کے لئے موزوں ہو اور جس کے ختم ہونے کی تاریخ امریکہ میں آپ کے امکانی قیام سے کم از کم چھ ماہ زیادہ ہو (تاوقتیکہ ملک کے لئے مخصوص معاہدے مستثنیٰ نہ کر دے)۔ اگر آپ کے پاسپورٹ میں ایک سے زیادہ فرد شامل ہیں، تو ہر وہ فرد جو ویزے کا خواہش مند ہے، اسے ایک درخواست جمع کرنا ہوگی۔
  • • ایک 2"x2" (5cmx5cm کی ایسی تصویر جو گزشتہ چھ ماہ کے دوران لی گئی ہو۔ تصویر کے ضروری فارمیٹ کے بارے میں اس ویب صفحہ پر تفصیلات موجود ہیں۔
  • آپ کو مقامی کرنسی میں ادا کردہ US$160 کی نا قابل واپسی نان امیگرینٹ ویز درخواست گزار کی پروسیسنگ فیس کو ظاہر کرنے والی رسید پیش کرنی ہوگی۔ اس ویب صفحہ پر اس فیس کی ادائیگی کے بارے میں مزید معلومات ہیں۔ اگر کوئی ویزا جاری کر دیا گیا ہے، تو عین ممکن ہے کہ آپ کی قومیت کی بنیاد پر ویزا جاری کرنے کی اضافی دو طرفہ فیس لی جائے۔ ڈیپارٹمینٹ آف اسٹیٹ کی ویب سائٹ یہ معلوم کرنے میں آپ کی مدد کر سکتی ہے کہ آیا آپ کو ویزا جاری کرنے کی دو طرفہ فیس ادا کرنی ہے یا نہیں اور اس فیس کی رقم کتنی ہے۔
  • • اگر قابل اطلاق ہو، تو ایک جہاز ران کی بک جو آپ کی ملازمت کے معاہدے کے ختم ہونے کی تاریخ سے زیادہ تک موزوں ہو اور تمام پچھلی جہاز رانوں کی بکس۔ اگر عملے کے ارکان بک جمع نہ کر سکے تو انہیں اس کے گم ہونے کی باقاعدہ رپورٹ جمع کرنا ہوگی۔

ان مشمولات کے علاوہ، آپ کو انٹرویو کے مقررہ وقت کا خط بھی پیش کرنا ہوگا جو اس بات کی تصدیق کرتا ہو کہ آپ نے اس سروس کے ذریعے انٹرویو کا وقت بک کیا تھا۔ آپ ایسے معاون دستاویزات اپنے ساتھ لا سکتے ہیں جن کے تعلق سے آپ کو یقین ہو کہ وہ قونصلر افسر کو فراہم کردہ معلومات میں معاون ہونگے۔

درخواست کیسے دیں

مرحلہ 1

نان امیگرینٹ ویزا الیکٹرونک درخواست (DS-160) فارم مکمل کریں۔

مرحلہ 2

ویزا درخواست کے لئے فیس ادائیگی کریں۔

مرحلہ 3

اس ویب صفحہ پر اپنی ملاقات کا وقت طے کریں۔ اپنی ملاقات کا وقت طے کرنے کے لئے آپ کو مندرجہ ذیل معلومات درکار ہونگی:

  • آپ کا پاسپورٹ نمبر
  • آپ کی ویزا فیس رسید کا رسید نمبر (اگر آپ کو یہ نمبر تلاش کرنے کے لئے مدد درکار ہے، تو یہاں پر کلک کریں۔)
  • آپ کے DS-160 کے توثیقی صفحے سے دس (10) عددی بارکوڈ نمبر۔
مرحلہ 4

اپنے ویزا انٹرویو کی تاریخ اور وقت پر امریکی سفارت خانہ یا قونصل خانہ جائیں۔ آپ اپنے ساتھ ملاقات کا خط، اپنا DS-160 توثیقی صفحہ، گزشتہ چھ ماہ کے دوران لی گئی ایک تصویر، آپ کے موجودہ اور پرانے پاسپورٹ اور ویزا فیس ادائیگی رسید کی اصل کاپی ضرور لائیں۔ ان تمام چیزوں کے بغیر درخواست گزار قبول نہیں کئے جائیں گے۔

معاون دستاویزات

معاون دستاویزات ان کئی عوامل میں سے صرف ایک ہے جس پر دوران انٹرویو قونصلر افسر غور کرے گا۔ قونصلر افسران ہر درخواست فرداً فرداً دیکھتے ہیں اور فیصلہ کرتے وقت اس کے پیشہ ورانہ، سماجی، ثقافتی اور دیگر عوامل کو مد نظر رکھتے ہیں۔ قونصلر افسران آپ کی مخصوص ارادوں، خاندانی حالت اور آپ کے ملک میں آپ کے طویل المیعاد منصوبوں اور مواقع پر بھی نظر ڈال سکتے ہیں۔ ہر معاملے کی انفرادی طور پر جانچ ہوتی ہے اور اسے قانون کے ہر پہلو سے توجہ دی جاتی ہے۔

حالانکہ معاون دستاویزات انٹرویو میں آپ کے معاون ہو سکتے ہیں، لیکن قونصلر افسران ویزا کے لئے آپ کی اہلیت کا تعین کرنے کے لئے ابتدائی طور پر آپ کے انٹرویو پر ہی انحصار کرتے ہیں۔ بہ الفاظ دیگر، معاون دستاویزات رضاکارانہ ہیں اور ان کی اہمیت ثانوی ہے۔

احتیاط: غلط دستاویزات پیش نہ کریںدھوکہ بازی یا غلط بیانی کے نتیجے میں ویزا مستقل طور پر ناقابل قبول قرار دیا جا سکتا ہے۔ یو ایس سفارت خانہ یا قونصل خانہ آپ کی معلومات کسی کو فراہم نہیں کرے گا اور آپ کی معلومات کی رازداری کا احترام کرے گا۔

ملے کے لیے: آپ کی کمپنی کے صدر دفتر کی طرف سے ایک خط اور/یا آپکی جہازران کی کتاب

مزید معلومات

ٹرانزٹ ویزا کے بارے میں مزید معلومات کے لئے اور عملہ ممبران ویزا کے لئے، ڈیپارٹمینٹ آف اسٹیٹ کی ویب سائٹ پر جائیں۔